44

سعودی عرب میں بچوں کے درجنوں ویڈیو گیمز پر پابندی عائد

پابندی بچوں کے خودکشی کے واقعات رونما ہونے کے بعد لگائی گئی (فوٹو: فائل)

پابندی بچوں کے خودکشی کے واقعات رونما ہونے کے بعد لگائی گئی (فوٹو: فائل)

ریاض: سعودی حکومت نے بچوں کو موت کے منہ میں لے جانے والے آن لائن گیمز سے ہونے والے جانی نقصان کے بعد درجنوں ویڈیو گیمز پر پابندی لگادی۔

عرب میڈیا کے مطابق حکومت نے مملکت میں خطرناک آن لائن گیمز سے دو بچوں کے خودکشی کرنے کے بعد ایسے تمام گیمز کو بند کردیا ہے جس میں بچوں کو تشدد پر اکسانے اور جان لیوا اسٹنٹ کرنے کی دانستہ ترغیب دی جارہی تھی۔

یہ بھی پڑھیں: سعودی عرب میں بلیو وہیل گیم نے 12 سالہ لڑکے کی جان لے لی

سعودی جنرل کمیشن فار آڈیو ویژول میڈیا نے کہا ہے کہ قواعد و ضوابط کی خلاف ورزی کرنے والے 47 خطرناک ویڈیو گیمز پر پابندی لگا دی گئی ہے، بند کیے گئے گیمز میں بچوں کے پسندیدہ اور معروف گیمز بھی شامل ہیں۔

مذکورہ بندش حال ہی میں خودکشی کے ان دو واقعات کے ردعمل میں کی گئی ہے جس میں ایک 13 سالہ لڑکی اور 12 سالہ لڑکے نے انٹرنیٹ پر بلیو وہیل نامی گیم کھیلتے ہوئے خود کو موت کے منہ میں دھکیل دیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.